دار چینی ٗ ذائقہ دار مصالحہ اور انمول دوا

Spread the love

دار چینی ایک قدیم خوشبو دار جڑی بوٹی ہے ٗ جو مصالحے کے طور پر استعمال ہوتی ہے ٗ پُر اثر دوا بھی ہے ۔ روایتاً اسے ٹھنڈ ٗ فلو اور نظام ہاضمہ کے مسائل کے حل کے لئے استعمال کیا جاتا ہے ۔ معطر اور خوشبو دار دارچینی مشرق اور مغرب کے درمیان ہونے والی مصالحہ جات کی تجارت میں بہت اہمیت رکھتی ہے۔ عرب تاجر جن کے ذریعے یونان ٗ روم اور دیگر ممالک اس سے متعارف ہوئے اسے کہرفا کے نام سے پکارتے تھے جو ایک بے مثال درخت کی چھال ہے ۔ بائبل اور یہودیوں کی مذہبی کتاب میں بھی اسی کا ذکر ہے ۔ قدیم مصری اسے فرعونوں کی لاشوں کو حنوط کرنے کے لئے استعمال کرتے تھے ۔ صدیوں سے بطور خوشبو باورچی خانے کے مقبول ترین مصالحے کے علاوہ دار چینی کی طویل تاریخ زخم مندمل کرنے والی جڑی بوٹی کے طور پر بھی ہے ۔ سن 2700 قبل مسیح سے بھی پہلے دار چینی قدیم طریقہ علاج میں ناک کی بند رکاوٹوں اور بلغمی کھانسی سے آرام حاصل کرنے کے لئے استعمال کی جاتی تھی اس کے بہت سے روایتی استعمالات کو اب جدید سائنس کی تائید حاصل ہے ۔ماہرین کے مطابق اصلی دار چینی کا درخت سولیمن ذائیلینیم ہے جو سری لنکا میں پایا جاتا ہے ۔

باورچی خانے میں اس کا استعمال

ایشیاء بھر کے پکوانوں میں دار چینی بہت استعمال کی جاتی ہے ٗ یہ گرم مصالحے کا اہم جُز وہے اور چٹ پٹے کھانوں کی اقسام میں اضافہ کرتا ہے ۔ مشرقِ وسطیٰ میں عام طو رپر گوشت کا دم پخت بناتے ہوئے اسے شامل کیا جاتا ہے ۔ خصوصاً بھیڑ اور بکڑے کے گوشت سے بنی ہوئی ڈشوں میں اس کا استعمال لازم ہے ۔ جبکہ مغربی کھانوں میں یہ کیک اور دم پخت پھلوں میں ذائقہ (Taste) پیدا کرنے کے لئے استعمال کیا جاتا ہے ۔ موسم سرما کے مشروبات جیسے سیب اور انگور کے مشروب ٗ کافی ٗ چائے اور گرم چاکلیٹ میں اسے ضرور ڈالا جاتا ہے ۔ دار چینی ثابت اور پاؤڈر دونوں شکلوں میں کافی استعمال ہوتی ہے اس کا پاؤڈر دودھ ٗ مشروبات ٗ کسٹرڈ ٗ کیک ٗ پیسٹری اور سیب کی پائی جیسے میٹھوں پر چھڑکا جاتا ہے ۔ پاکستانی اور انڈین کھانے بھی اس کے بغیر نامکمل تصور کئے جاتے ہیں ۔ مرغن کھانوں کو ذائقہ دار بنانے کے لئے دار چینی کا استعمال عام ہے اس کے علاوہ پلاؤ اور بریانی میں بھی اس کی شمولیت ضروری ہے ۔ یخنی کو ذائقہ دار بناتا ہے اور اس میں سے گوشت کی بو کو ختم کرتا ہے ۔ یہ کھانے کو زود ہضم بھی بناتی ہے اور اس میں خوبصورتی بھی پیدا کرتی ہے ۔ اس لئے ہر گھر کے باورچی خانے میں لازمی پائی جاتی ہے ۔

معالجاتی اہمیت

اگرچہ دار چینی کو باورچی خانے کے بہترین خوشبو دار مصالحے کے طور پر جانا جاتا ہے لیکن اس میں صحت یاب کرنے کی ممتاز اور قابلِ ذکر خصوصیات موجود ہیں ۔ یہ جریان خون ٗ فلو ٗ بخار ٗ ٗ رافع ریاح ٗ متلی اور خرابی معدہ کو ختم کرنے میں مددگار ثابت ہوتی ہے اور مرض کو روکنے والی بہترین دوا ہے ۔ یہ آنتوں میں سے گیس خارج کرنے میں مدد دیتی ہے

دار چینی کا بدہضمی اور زخموں کو مندمل کرنے کا روایتی استعمال جدید سائنس سے بھی تائید پاچکا ہے ۔ بہت سے دوسرے پکانے والے مصالحہ جات کی طرح یہ بھی طاقت ور جراثیم کش ہے۔ یہ مختلف اقسام کے بیکٹریا ٗ فنگس اور وائرس کا خاتمہ کرسکتا ہے ۔

حلق کے مسائل کے لئے طاقت ور دوا :

روایتی چینی ڈاکٹر اور بھارتی طبیب صدیوں سے دار چینی کو اکثر ادرک کے ساتھ ملا کر عملِ تنفس کے مسائل خصوصاً کھانسی ٗ حلق کی جھلی کی سوجن اور دمہ کے علاج کے لئے تجویز کرتے ہیں ۔ یہ خوشبو دار مصالحہ جسمانی اور ذہنی تھکن ٗ ڈپریشن ٗ فلو اور مختلف وائرل انفیکشن سے نجات دلانے میں مددگارثابت ہوتا ہے ۔ یہ جسم کو ہلکا ٗ پھلکا اور ذہن کو پُرسکون کرتا ہے ۔ اندرونی طور پر تحریک پیدا کرنے والی دار چینی جسم کوگرم رکھتی ہے ۔ قوت حیات کو بڑھاتی ہے ۔ دوران خون کو تیز کرتی ہے اور خون میں سے فاسد مادوں کو نکال کر اسے صاف کرتی ہے ۔ کھانسی اور فلو کے اثرات نمایاں ہوتے ہی دار چینی کی چائے گرم پانی میں دار چینی ڈال کر اس کا عرق نکالیں پھر اس میں لیموں کا رس اور ایک چائے کا چمچ شہد ملا کر پئیں ۔ یہ ایسی دوا ہے جو آپ کسی بھی موسم میں لے سکتے ہیں ۔ اور یہ ہر موسم میں ہونے والے فلو کے لئے بہترین ہے ۔
اسے فلو کے اثرات ظاہر ہوتے ہی استعمال کریں ۔ ورنہ اس کا اثر نہیں ہوگا اور آپ کی محنت بھی ضائع ہوجائے گی۔ دار چینی کو دس منٹ پانی میں اُبالیں اور اس کا جوشاندہ تیار کرکے استعمال کریں ۔ یہ طبیعت بہتر کرنے کے لئے آزمودہ نسخہ ہے ۔

دار چینی اور شہد مختلف بیماریوں کے لئے شفاء :

امریکی اور کینڈین ماہرین کے تحقیقات کے مطابق شہہد اور دار چینی مختلف بیماریوں کے لئے بہترین دوا ہیں ۔ کچھ بیماریوں کے لئے انہیں کیسے استعمال کیا جائے؟ درج ذیل
میں بیان کیا جارہا ہے ۔

دل کے امراض

: شہد اور دار چینی کا مکسچر بنائیں ٗ اسے روٹی ٗ ڈبل روٹی یا پراٹھے پر جام اور جیلی کی جگہ لگا کر روزانہ کھائیں ۔ یہ کولیسٹرول کو کم کرتا ہے اور ہاٹ اٹیک ہونے کے امکانات میں بھی کمی واقع ہوتی ہے ۔ اس کا باقاعدہ استعمال دل کی دھڑکن کو مضبوط کرتا ہے ۔

بال گرنا

بال گرنے کی صورت میں گرم زیتون کے تیل میں ایک کھانے کا چمچ شہد ٗ ایک چائے کا چمچ دار چینی کا پاؤڈر ملا کر مرکب تیار کرلیں ۔ اب نہانے سے پندرہ منٹ پہلے بالوں میں لگائیں اور پھر بال دھولیں ۔ یہ بالوں کو گرنے سے روکنے میں مددگار ثابت ہوتا ہے ۔

کولیسٹرول

سولہ اونس چائے کے قہوہ میں دو کھانے کے چمچ شہد اور تین چائے کے چمچ دار چینی کا پاؤڈر ملا کر دن میں دو مرتبہ پینے سے ہر قسم کا کولیسٹرول کم ہوتا ہے ۔

اسکن انفیکشن

دار چینی پاؤڈر اور شہد کی برابر مقدار ملا کر اسے متاثرہ حصّے پر لگائیں ۔ یہ جلد کے تمام انفیکشن کے لئے بہترین دوا ہے ۔

کینسر

آسٹریلیا اور جاپان میں ہونے والی ریسرچ کے نتائج کے مطابق معدہ اور ہڈیوں کے بڑھے ہوئے کینسر ختم کرنے میں دار چینی نے اہم کردار ادا کیا ہے ۔ ان کینسر کی ایڈوانس اسٹیج میں مبتلا مریضوں کو چاہئے کہ وہ روزانہ ایک کھانے کا چمچ شہد اور ایک چائے کا چمچ دار چینی کا پاؤڈر دن میں تین مرتبہ تین ماہ تک استعمال کریں ۔

کیل مہاسے

تین کھانے کے چمچ شہد اور ایک چائے کا چمچ دار چینی کے پاؤڈر کا پیسٹ رات کو سونے سے پہلے لگائیں اور صبح نیم گرم پانی سے دھولیں ۔ دو ہفتے تک روزانہ اس کا استعمال کیل مہاسوں کو جڑ سے ختم کردیتا ہے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

0 Comments
scroll to top